Tue. Feb 27th, 2024
375 Views

وزیراعظم آزادحکومت ریاست جموں وکشمیرراجہ محمدفاروق حیدرخان نے کہاہے کہ موجودہ وقت آزمائش کاوقت ہے ۔ علماء کرام کو باہمی اتحادواتفاق اور اخوت وبھائی چارے کے فروغ کے لیے اپناجاندار کردار اداکرناہوگا۔ سب مسلمان اللہ کے رسول کی امت ہیں۔ تعصبات اور فرقہ واریت کے خاتمہ کے لیے سب کومل کراپنی ذمہ داریاں پوری کرناہوں گی۔ آزادکشمیرانتہائی پرامن خطہ ہے، یہاں فرقہ واریت اور نفرتوں کوپہنپنے نہیں دیاجائیگا۔ پاکستان میں ہونے والی دہشتگردی سے اہل کشمیرپریشان ہیں ، کیونکہ سیاسی ، جمہوری ، دفاعی اور اندرونی طورپر مضبوط پاکستان ہی کشمیریوں کا بہتروکیل ثابت ہوسکتاہے۔ پاکستان کے دشمن ہمیں کمزور کرناچاہتے ہیں۔ ان سازشوں کوناکام بناناہے۔ موجودہ حکومت اورمسلح افواج پاکستان مل کردہشتگردی کاقلع قمع کریں گے۔ افواج پاکستان ، رینجرز اورپولیس نے ملکی سلامتی اور استحکام کے لیے جوقربانیاں پیش کی ہیں ، وہ قوم کا سرمایہ حیات ہیں ۔فوج ، پولیس اور رینجرز ہمارے محسن اور محافظ ہیں ۔اقتدارمیں عام آدمی کو شامل کرنے کے لیے آزاد خطہ کے اندر بلدیاتی نظام کوبحال کررہے ہیں۔ برابری کی بنیاد پر لوگوں کو ترقی کے یکساں مواقع مہیاکرنا ہماری ترجیحات میں شامل ہے۔ آزادکشمیرمیں میاں نوازشریف کے ویژن کے مطابق تعمیروترقی کے خواب کوشرمندہ تعبیرکررہے ہیں۔ وزیراعظم آزادکشمیر راجہ محمدفاروق حیدرخان ، ممبراسمبلی پیر علی رضا بخاری کے والد گرامی ابوالحسن محمدسعید بخاری مرحوم کے تعزیتی ریفرنس اور وزیر حکومت سید شوکت علی شاہ کے والد محترم کے سالانہ عرس کی تقریبات سے خطاب کررہے تھے۔ اس موقع پر سپیکراسمبلی شاہ غلام قادر ، وزیراطلاعات مشتاق منہاس سمیت سیاسی، مذہبی اورسماجی شخصیات نے بھی خطاب کیا جبکہ ممبر کشمیر کونسل عبدالخالق وصی،احمد رضا قادری، وزیر اعظم کے پولیٹیکل سیکرٹری محمود خان ، ڈی جی سیاسی امور ملک ذوالفقار و دیگر بھی اس موقع پر موجود تھے۔ وزیراعظم آزادکشمیر کاکہناتھاکہ آزادکشمیراولیاء کی دھرتی ہے ، اولیاء کی تعلیمات امن اور محبت ہیں ۔ انسانیت کی فلاح اور انسانیت کے لیے اچھی سوچ رکھنے والوں کے نام ہی زندہ رہیں گے۔ ملک کے اندربارود کی بو ختم کرنے کے لیے علماء کرام کو آگے آناہوگا۔پاکستان کے دشمن ہمیں کمزورکرناچاہتے ہیں اوردشمن ہمیں نفسیاتی طورپر دباؤمیں لاناچاہتاہے۔ لیکن وہ مذموم مقاصد میں کبھی کامیاب نہیں ہوگا۔ انھوں نے کہا نہتے انسان پر حملہ یااس کی جان لینا اسلامی تعلیمات کے خلاف ہے، اوراسلام میں ایسے فعل کو ناپسندیدہ قراردیاگیاہے۔ یہودونصاری کے آلہ کار کاکردار اداکرنے والوں کو قوم پوری قوت کے ساتھ مسترد کردے۔ پاکستان تاقیامت رہنے کے لیے بناہے ، اسکی حفاظت ، عزت اور قدر ہم پر فرض ہے۔ ہم نے فیصلہ کررکھاہے ، کہ نفرتوں میں اضافہ نہیں کریں گے۔جنہوں نے نفرتیں بڑھائیں، انھیں بھگتناپڑا۔ وزیراعظم آزادکشمیر راجہ فاروق حیدرخان نے کہا مقبوضہ کشمیرکے حالات بڑی توجہ کے متقاضی ہیں۔ چیف آف آرمی سٹاف لائن آف کنٹرول اور آزادکشمیرکے حالات سے پوری طرح آگاہ ہیں ۔ملک کی حفاظت اور سلامتی کے لیے پوری قوم مسلح افواج پاکستان کے ساتھ دفاع وطن کافریضہ سرانجام دے گی۔ اورپوری قوت کے ساتھ دشمن کے تمام تر عزائم کو ناکام بنایاجائیگا۔ مقبوضہ کشمیرمیں بھارت سازش کے تحت کشمیریوں کو معذور بنارہاہے۔ جنت نظیر وادی میں قابض افواج نے ظلم وبربریت کی انتہاء کررکھی ہے ۔ پاکستان کو کشمیریوں کی حمایت سے دورکرنے کے لیے دشمن قوتیں پاکستان میں دہشتگردی جیسے مکروہ واقعات میں ملوث ہیں۔ لیکن وہ مملکت خداداد پاکستان کے عوام کے عزم اور ہمت کو شکست نہیں دے سکتیں ۔ قوم متحداور منظم ہے ، دشمن کے عزائم کو خاک میں ملادیاجائے گا۔ وزیراعظم آزادکشمیرنے کہاحکومت آزادکشمیرپانچ سالہ عرصہ میں ریاست میں تعمیروترقی اور بلاتخصیص عوام کو بنیادی سہولیات کی فراہمی یقینی بنائے گی ۔آزادکشمیرکی تعمیروترقی اورخطے کو خوشحالی کی راہ پر گامزن کرنے کے لیے منظم حکمت عملی ترتیب دی گئی ہے۔ وزیراعظم پاکستان میاں محمدنوازشریف آزادکشمیرکی تعمیروترقی میں گہری دلچسپی رکھتے ہیں۔ میاں نوازشریف نے آزادکشمیرکے 24دورے کیے، جوان کا اہل کشمیرسے محبت اور عقیدت کاعملی اظہارہے۔ آزادکشمیرمیں مسلم لیگ ن کی حکومت وزیراعظم پاکستان میاں محمدنوازشریف کے ویژن کے مطابق عوامی خدمت کے سفر کو جاری رکھے ہوئے ہے اور قائد پاکستان کے ویژن کے مطابق آزادکشمیرمیں تعمیروترقی ، اقتصادی خوشحالی ، میرٹ کی بحالی ، اداروں کے استحکام ، آئین وقانون کی بالادستی کے خواب کو شرمندہ تعبیرکریں گے۔

By ajazmir