Fri. May 24th, 2024
197 Views

ہٹیاں بالا(نمائندہ خصوصی)جنگلوں میں خوراک نہ ملنے کے بعد جنگل کے بادشاہ شیر اور چیتے نے آزاد کشمیر کے ضلع جہلم ویلی میں آبادیوں کا رخ کر لیا،گوجربانڈی اور پونیاں،گھڑتھامہ میں شیر، چیتے کے حملوں میں لاکھوں روپے مالیت کی ایک گائے،ایک بیل،ایک دنبہ،ایک بکرا، اور ایک بکری ہلاک ہو گئی،جنگلی جانوروں کے آبادیوں میں رخ کے باعث عوام گھروں کے اندر بند ہو کر رہ گئے،محکمہ وائلڈ لائف نے مکمل خاموشی اختیار کرتے ہوئے عوام کے جان و مال کو جنگلی جانوروں کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا۔تفصیلات کے مطابق ضلع جہلم ویلی کی یونین کونسل گوجر بانڈی میں شیر کے حملہ میں صائم منیر ولد منیر بھٹی کی ایک گائے،ایک بیل،ایک دنبہ،ایک بکرا، گھڑتھامہ،پونیاں میں چیتے کے حملہ میں محمد ارشاد کیانی ولد محمد خان کیانی کی ایک بکری ہلاک ہو گئی، رواں ماہ اپریل کے دوران ریچھ،شیر،چیتوں کے حملہ میں ضلع جہلم ویلی بھر میں ایک شخص کے شدید زخمی ہونے کے ساتھ ساتھ مقامی لوگوں کے لاکھوں روپے مالیت کے مال مویشی ہلاک ہو چکے ہیں جنگلی جانوروں کی جانب سے ضلع جہلم ویلی بھر باالخصوص یونین کونسل چکوٹھی،کھلا نہ،گوجربانڈی،چکہامہ،نڑدجیاں میں درجنوں مویشیوں کو ہلاک کرنے کے باوجود محکمہ وائلڈ لائف خاموش تماشائی کا کردار ادا کرتے ہوئے مقامی لوگوں کی جان و مال کو جنگلی جانوروں کے رحم وکرم پر چھوڑ دیا ہے،عوامی حلقوں نے ایک بار پھر وزیر اعظم،وزیرو ائلڈ لائف اور چیف سیکرٹری آزاد کشمیر سے نوٹس لینے اور عوام کے جان و مال کو محفوظ بنانے کے لیے اقدامات کرنے کے لیے سخت احکامات دینے کا مطالبہ کیا ہے۔۔۔۔

By ajazmir