Mon. Apr 22nd, 2024
160 Views

۔الیکشن کمیشن آف پاکستان نے قومی اسمبلی میں اب تک کی پارٹی پوزیشن کی تفصیل جاری کردی۔ خواتین اور اقلیتوں کی نشستوں کی تقسیم کے بعد مسلم لیگ ن ایوان میں سب سے بڑی پارٹی بن گئی

ای سی پی کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے امیدوار 75 جنرل نشستوں پر کامیاب ہوئے جبکہ 9 آزاد امیدواروں نے اس میں شمولیت اختیار کی، آزاد امیدواروں کی شمولیت کے بعد ن لیگ کے جنرل نشستوں کے ارکان کی تعداد 84 تک پہنچ گئی ہے۔

مسلم لیگ ن کو اقلیتوں کی 4 اور خواتین کی 20 نشستیں ملیں، مسلم لیگ ن کی اب تک کی قومی اسمبلی کی نشستوں کی تعداد 108 ہو گئی۔

الیکشن کمیشن کے مطابق پیپلز پارٹی کے 54 امیدوار جنرل نشستوں پر کامیاب ہوئے، اس جماعت میں کوئی کامیاب آزاد امیدوار شامل نہیں ہوا۔ پیپلز پارٹی کو اقلیتوں کی 2 نشست اور خواتین کی 12 نشستیں ملیں اور یوں مجمعوعی تعداد 68 ہو گئی۔

ای سی پی کے مطابق جنرل نشستوں پرقومی اسمبلی میں 99 آزاد ارکان کامیاب ہوئے،جن میں سے 81 سنی اتحاد کونسل میں شامل ہوئے ہیں جبکہ 8 آزاد امیدوار تاحال کسی جماعت میں شامل نہیں ہوئے ہیں۔

حکومت بنانے کےلیے 169 ارکان کی ضرورت ہوگی، مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی مل کر حکومت بنائیں تو انہیں اور کسی بھی جماعت کی ضرورت نہیں ہوگی۔

الیکشن کمیشن کے مطابق متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) کے 17 جنرل نشستیں ہیں، جبکہ ایم کیو ایم کو اقلیت کی ایک نشست اور خواتین کی 4 نشستیں ملی جس کے ساتھ ارکان کی تعداد 22 ہو گئی۔

ای سی پی کے مطابق جمعیت علماء اسلام (ف) کے 6 ارکان کامیاب ہوئے ہیں، 2 خواتین کی نشستیں ملیں اور مجموعی تعداد 8 ہو گئی۔

پاکستان مسلم لیگ ق کے 3 ممبران جنرل نشست پر کامیاب ہوئے اور ایک ازاد امیدوار کی شمولیت کے بعد ارکان کی تعداد 4 ہو گئی تھی۔ خواتین کی ایک مخصوص نشست ملنے پر ق لیگ کے ارکان کی تعداد 5 ہو گئی۔

الیکشن کمیشن کے مطابق استحکام پاکستان پارٹی کے 3، مجلس وحدت مسلمین کا 1، مسلم لیگ ضیاء، پشتونخوا ملی عوامی پارٹی، بی اے پی، بی این پی، نیشنل پارٹی کا 1،1 امیدوار کامیاب ہوا۔

ای سی پی کے مطابق قومی اسمبلی 3 نشستوں پر انتخابی عمل التوا کا شکار ہے۔

By ajazmir