Tue. Feb 27th, 2024
195 Views

ہٹیاں بالا(بیورورپورٹ)لائن آف کنٹرول کے قریبی قصبہ چکوٹھی، کھلانہ کے نواحی گاؤں اپر اوپی بالا، سگنہ میں معذور،غریب شخص کا رہائشی دو منزلہ مکان بجلی کے شارٹ سرکٹ کے باعث جل کر خاکستر،لاکھوں روپے مالیت کا نقصان اہل خانہ معجزاتی طور پر محفوظ رہے،آتشزدگی کے باعث مکین شدید سردی میں کھلے آسمان تلے رہنے پر مجبور ہو گئے۔ تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز کھلانہ کے مضافاتی علاقہ سگنہ کے رہائشی معذور شخص منیر قریشی کے رہائشی مکان میں اچانک آگ بھڑک اٹھی دیکھتے ہی دیکھتے آگ نے پورے گھر کو اپنی لپیٹ میں لے لیا مقامی افراد نے پاک فوج کے جوانوں کے ساتھ آگ کو بجھانے کی کوشش کی مگر آگ کی شدت تیز ہونے کے باعث آگ پر قابو نہ پایا جا سکا مکان راکھ کا ڈھیر بن گیا آتشزدگی کے باعث متاثر خاندان چھت سے محروم،بے یاروں مددگار کھلے آسمان تلے بیٹھ گئے آگ کے نتیجہ میں گھریلوسامان،طلائی زیورات،فرنیچر،ضروری کاغذات مکمل راکھ کا ڈھیر بن گئے متاثرہ شخص کا کہنا تھا کہ زندگی بھر کی جمع پونجی آج مٹی کا ڈھیر بن گئی بچا کچھ نہیں مشکل سے وقت کی روٹی میسر کرکے بیوی بچوں کا پیٹ پالنا محال ہے مکان کہاں سے تعمیر ہو گا؟ متاثرہ شخص نے آبدیدہ آنکھوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مہنگائی کے دور میں جہاں روٹی کپڑا مہیا کرنا مشکل ہے آمدن بھی اُتنی زیادہ نہیں بچوں کے لیے چھت مہیا کروں گا یا انکے لیے روٹی کپڑا،اللہ تعالیٰ کی آزمائش ہے جیسے اسکی رضا علاقہ میں فائر بریگیڈ 1122کی ایمرجنسی سروس کی عدم دستیابی کے باعث آئے روز حادثات میں عوام کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے عوام علاقہ، معززین علاقہ نے حکومت آزاد کشمیر بالخصوص وزیراعظم چوہدری انوارالحق سے مطالبہ کیا ہے کہ متاثرہ خاندان کی ہنگامی سطح پر امداد فراہم کریں انتظامیہ جہلم ویلی فوری طور پر عارضی طور پر متاثرہ خاندان کی رہائش کا بندوبست کرتے ہوئے ٹینٹ کی فراہمی سمیت دیگر ضروری اشیاء فراہم کرے آتشزدگی مکان کی اطلاع ملتے ہی جہاں مقامی کمیونٹی نے امدادی کاموں میں حصہ لیا وہاں پاک فوج کے آفیسران اور جوان بھی موقع پر پہنچ گئے اور امدادی سرگرمیوں میں حصہ لیتے ہوئے آگ بجھانے کے عمل سمیت امدادی کاموں میں حصہ لیا آگ بجھانے والے افراد جن کے ہاتھ معمولی طور پر زخمی ہوگئے تھے انکو فرست ایڈ بھی فراہم کی گئی

By ajazmir