شاہنواز کیانی کے ورثاء سمیت مختلف برداریوں کے سینکڑوں افرادنے پتھر پھینک کر اور ٹائر جلا کر تلی کوٹ جانے والی روڈ ہر قسم کی ٹریفک کے لیے بند کر دی کشیدگی مزید بڑھ گئی ایس پی جہلم ویلی سمیت پولیس کی بھاری نفری موقعہ پر موجود

779 Views

شاہنواز کیانی کے ورثاء سمیت مختلف برداریوں کے سینکڑوں افرادنے پتھر پھنک کر اور ٹائر جلا کر تلی کوٹ جانے والی روڈ ہر قسم کی ٹریفک کے لیے بند کر دی

کشیدگی مزید بڑھ گئی ایس پی جہلم ویلی سمیت پولیس کی بھاری نفری موقعہ پر موجود۔تفصیلات کے مطابق بدھ اور جمعرات کو رات گئے مئی کے اوائل میں قتل ہونے والے شاہنواز کیانی کے ورثاء سمیت مختلف برادیوں کے سینکڑوں افراد نے عزیر آفتاب کیانی،نواز احمد کیانی اور دیگر کی قیادت میں سینکڑوں مرد و خواتین اور بچوں نے اپر گوجربانڈی کے قریب پتھر پھینک کر اور تلی کوٹ چوک میں ٹائر جلا کر احتجاج شروع کر رکھا ہے



مظاہرین کا مطالبہ ہے کہ انتظامیہ محمد سعید مغل کی تدفین گوجر بانڈی اور کسی اور علاقے میں کروائے ہم کسی بھی صورت میں تلی کوٹ قبرستان میں تدفین اور جنازہ نہیں ہونے دیں گے ہم شاہنواز کیانی کا قتل کسی صورت رائیگاں نہیں جانے دیں گے اگر میت تلی کوٹ لانے کی کوشش کی گئی تو حالات خرابی کی تمام تر ذمہ داری ضلعی انتظامیہ اور مغل برادری پر عائد ہو گی کیانی اور مغل برادری کے ایک بار پھر آمنے سامنے آنے کے بعد علاقہ میں شدید کشیدگی پائی جاتی ہے

ایس پی جہلم ویلی ریاض مغل،ڈی ایس پی رضاالحسن گیلانی،اسسٹنٹ کمشنر ہٹیاں بالا سردار عبدالقادر،ایس ایچ اوز منظر حسین چغتائی،راجہ یاسر،ضیاء السلام عباسی سمیت پولیس کی بھاری نفری موقعہ پر موجود ہیں دوسری طرف مغل برادری کے درجنوں نوجوان محمد سعید مغل کی میت لینے مظفرآباد روانہ ہو گئے ہیں اطلاع ہے انتظامیہ وقتی طور پر میت کو مظفرآباد میں روک رکھا ہے
(اس حوالہ سے قتل ہونے والے شاہنواز کیانی کی بیٹی کا کیا کہنا تھا سنئیے اس ویڈیو میں)